مقام حضرت موسیٰ علیہ السلام

مقام حضرت موسیٰ علیہ السلام

The Maqam of Prophet Musa (A.S)

The Maqam of Prophet Musa (A.S)

 

موسیٰ علیہ السلام کو دفن کرنے کی صحیح جگہ معلوم نہیں ہے لیکن روایت کے

مطابق صلاح الدین ایوبی نے ایک بار خواب دیکھاجہاں انہیں یہ جگہ دکھائی گئی

اس نے اس جگہ پر ایک مسجد بنائی تھی جسے

سلطان بیبارس نے 1269 عیسوی میں مزید بڑھایا تھا۔

مقام جیریکو سے 11 کلومیٹر جنوب اور یروشلم سے 20 کلومیٹر مشرق میں واقع ہے۔

قرآن مجید میں موسیٰ علیہ السلام کا نام 136 مرتبہ آیا ہے جو کہ کسی بھی دوسرے نبی سے زیادہ ہے۔

اس مقام پر ایک مملوک نوشتہ پڑھتا ہے کہ اس مقام کی تعمیر کا حکم اس نبی کی قبر پر ہے

جس نے خدا سے کلام کیا تھا موسیٰ کو ان کی عظمت سلطان

ظہیر ابو الفتح بیبرس نے سنہ 668 ہجری میں حکم دیا تھا۔

 مقام نبی موسیٰ علیہ السلام کا فضائی منظر 

 

The Aerial view of the Nabi Musa (a.s)

 

یہ عمارت ایک بڑے مرکزی صحن پر مشتمل ہے جس کے چاروں

طرف 120 سے زائد کمروں سے گھرا ہوا ہے جس میں مسجد کے

دائیں طرف حضرت موسیٰ کی تدفین ہے جو صحن کی مغربی دیوار کے خلاف بنائی گئی ہے۔

 

Covering Over The Maqam Nabi Musa (a.s)

 

ابوہریرہ رضی اللہ عنہ روایت کرتے ہیں کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا

کہ موت کا فرشتہ موسیٰ علیہ السلام کے پاس بھیجا گیا۔

جب وہ موسیٰ (علیہ السلام) کے پاس آیا تو موسیٰ (علیہ السلام) نے اس کی آنکھ پر تھپڑ مارا۔

فرشتہ اللہ کے پاس واپس آیا اور کہا کہ آپ نے مجھے ایک ایسے بندے کے پاس بھیجا ہے جو مرنا نہیں چاہتا۔

اللہ تعالیٰ نے فرشتے کو حکم دیا کہ وہ اس کے پاس واپس آئے اور اس سے کہے

کہ اپنا ہاتھ بیل کی پشت پر رکھے اور اس کے نیچے آنے والے ہر بال کے بدلے

میں اسے ایک سال کی زندگی دی جائے گی۔ موسیٰ علیہ السلام نے عرض کیا

یا رب! اس کے بعد کیا ہوگا اللہ تعالیٰ نے جواب دیا پھر موت۔

موسیٰ علیہ السلام نے فیصلہ کیا کہ اب رہنے دو۔

موسیٰ علیہ السلام نے پھر اللہ تعالیٰ سے درخواست کی کہ وہ انہیں

مقدس سرزمین (مسجد اقصیٰ کے قریب) کے اتنے قریب مرے کہ وہ اس سے ایک پتھر کے فاصلے پر ہوں۔

ابو ہریرہ رضی اللہ عنہ نے رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کو مزید کہا پھر فرمایا

اگر میں وہاں ہوتا تو میں تمہیں ان کی قبر سڑک کے کنارے سرخ ریت کے ٹیلے کے نیچے دکھاتا۔

You Might Also Like: The Maqam of Prophet Ebrahim (A.S)

Leave a Reply

Your email address will not be published.