اسلام میں صلاۃ الاستخارہ کی دعا

اسلام میں صلاۃ الاستخارہ کی دعا

Salah Tul- Istakharah Dua In Islam

 

Salah-Tul-Istakharah-Dua-In-Islam

 

،استخارہ کا مطلب ہے اللہ تعالیٰ سے خیر طلب کرنا

یعنی جب کوئی اہم کام کرنے کا ارادہ کرتا ہے تو کام سے پہلے استخارہ کرتا ہے۔

استخارہ کرنے والااللہ تعالیٰ سے درخواست کرتا ہے کہ

اے غیب کے جاننے والے میری رہنمائی فرما یہ کام میرے لیے بہتر ہے یا نہیں؟

استخارہ خاص طور پر صوفی کے خواہشمندوں کو تجویز کیا جاتا ہے تاکہ

وہ غلط دروازے پر دستک دینے سے بچ سکیں۔

صلاۃ الاستخارہ کی دعا

جابر بن عبداللہ رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ

رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم ہمیں ہر معاملے میں استخارہ کرنے کا طریقہ سکھاتے تھے ۔

آپ صلی اللہ علیہ وسلم ہمیں قرآن کی سورتیں سکھاتے تھے۔

:آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا

جب تم میں سے کسی کو کوئی کام کرنے کا خیال ہو تو اسے چاہیے کہ”

فرض کے علاوہ دو رکعت نماز پڑھے اور نماز کے بعدصلاۃ الاستخارہ کی دعا پڑھیں”۔

 

أَللَّهُمَّ إِنِّي أَسْتَخِيرُكَ بِعِلْمِكَ وَأَسْتَقْدِرُكَ بِقُدْرَتِكَ وَأَسْأَلُكَ مِنْ فَضْلِكَ الْعَظِيمِ

 فَإِنَّكَ تَقْدِرُ وَلَا أَقْدِرُ وَتَعْلَمُ وَلَا أَعْلَمُ وَأَنْتَ عَلاَّمُ الْغُيُوبِ أَللَّهُمَّ إِنْ كُنْتَ

تَعْلَمُ أَنَّ هَذَا الْأَمْرَ خَيْرٌ لِي فِي دِينِي وَمَعَاشِي وَعَاقِبَةِ أَمْرِي فَاقْدِرْهُ لِي

وَيَسِّرْهُ لِي ثُمَّ بَارِكْ لِي فِيهِ وَإِنْ كُنْتَ تَعْلَمُ أَنَّ هَذَا الْأَمْرَ شَرٌّ لِي فِي دِينِي وَمَعَاشِي وَعَاقِبَةِ 

*أَمْرِي فَاصْرِفْهُ عَنِّي وَاصْرِفْنِي عَنْهُ وَاقْدِرْ لِيَ الْخَيْرَ حَيْثُ كَانَ ثُمَّ أَرْضِنِي بِه

 

اے اللہ! میں تیرے علم سے بھلائی مانگتا ہوں اور تیری قدرت سے طاقت چاہتا ہوں۔

اور میں تجھ سے تیری عظیم نعمتوں کا سوال کرتا ہوں

کیونکہ تو قدرت رکھتا ہے اور میرے پاس طاقت نہیں ہے۔

تو سب کچھ جانتا ہے اور میں نہیں جانتا اور تو غیب کا علم رکھتا ہے۔

اے اللہ!میرے دین اور ایمان کے لیے، میری زندگی اور آخرت  کے لیےبہتر ہے۔

پھر اسے میرے لیے مقدر کر اور میرے لیے آسان کر دے۔

اور  اس میں میرے لیے  برکت ڈال دے۔

 اے اللہ! تیرے علم میں اگر یہ عمل میرے لیے برا ہے تو

،میرے دین و ایمان کے لیے، میری زندگی اور آخرت کے لیے

دنیا میں اور آخرت کے لیے برا ہے تو اسے مجھ سے پھیر دے۔

اور مجھے اس سے دور کر دے اور جو بھی بہتر ہے۔

صلاۃ الاستخارہ کا طریقہ

سات مرتبہ استخارہ کرنا افضل ہے۔

اگر آپ کو جواب موصول ہو گیا ہے تو استخارہ کرنا چھوڑ دیں۔

دعا پڑھنے کے  بعد وضو کر کے قبلہ کی طرف منہ کر کے سو جائیں۔

یہ ہمارے پیارے نبی صلی اللہ علیہ وسلم کی سنت ہے۔ 

اگر خواب میں کوئی سفیدی دیکھے یعنی دودھ، سفید کاغذ، سفید آسمان

سفید کپڑے، سفید روشنی اور ہریالی یعنی سبز رنگ کی کوئی چیز ہو۔

مثلاً گھاس، پودے، درختاور سبز کپڑے، سبز روشنی ہو  تو سمجھ لیں کہ یہ کام بہتر ہے۔

اور اگر کوئی سرخی دیکھے یعنی کوئی بھی چیز سرخ رنگ کی ہو۔

مثلاً خون، سرخ لباس، سرخ پھل، سرخ روشنی۔

اورکالا پن یعنی کوئی بھی چیز کالا رنگ ہو۔

، مثلاً کالا پانی، کالی روشنی، کالا لباس، کالا آسمان

کالی دیوار  تو اسے برا سمجھیں اور اس سے اجتناب کریں۔ 

اگر کوئی خواب یاد نہ آئے یا کوئی رنگ نظر نہ آئے تو اپنے دل کی پیروی کریں۔

 

 

You May Also Like: A Real Story From Hadeeth

You May Also Like: Story Of Fayruz al-Daylami(R.A)

Leave a Reply

Your email address will not be published.