کیا اسلامی شریعت کے مطابق گھر میں کتے رکھنا حرام ہے؟

کیا اسلامی شریعت کے مطابق گھر میں کتے رکھنا حرام ہے؟

Is Keeping Dogs In The House Haram (No Permissible) As Per Islamic law?

 سوال: 

اس وقت بہت سے لوگ شوق کے طور پر کتے پالتے ہیں۔

یہ کتے بازار میں خریدے اور بیچے جاتے ہیں۔

سوال یہ ہے کہ کیا اس طرح کتوں کی خرید و فروخت کا کاروبار کرنا جائز ہے؟

 جواب  :

جیسا کہ کتے نگہبانی کا اچھا کام کرتے ہیں اور

حفاظت کے لیے کتوں کو رکھنا اور خریدنا اور بیچنا جائز ہے،

پھر حفاظتی ضروریات کے لیے کتوں کی خرید و فروخت

اور مالک کے لیے قیمت ادا کرنا جائز ہو گا۔

لیکن اسلام کتے پالنے کو مشغلہ یا

غیر ملکی فیشن کی اجازت نہیں دیتا۔

اس کی سزا ان لوگوں کو ہے جو بغیر کسی ضرورت کے رکھنے

والے ہر روزاس کے حسنات میں سے ایک یا دو قیراط ضائع کرتے ہیں۔

شکار کے لیے کتے پالنے، مویشیوں کی حفاظت اور

فصلوں کی حفاظت کے معاملے میں استثناء کیا گیا ہے۔

:ابو ہریرہ رضی اللہ عنہ بیان کرتے ہیں کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا

جو کوئی کتا پالے گا سوائے ایک کتے کے چرانے

، شکار کرنے یا کھیتی باڑی کے لیے،

ہر روز اس کے ثواب میں سے ایک قیراط کم کیا جائے گا۔

صحیح مسلم حدیث نمبر1575

:دوسری حدیث میں رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا

رحمت کا فرشتہ اس گھر میں داخل نہیں ہوتا جس گھر میں کتا  ہو۔

صحیح بخاری، حدیث 5949

 تو ہم کہہ سکتے ہیں  

اسلام میں کتے پالنا جائز نہیں سوائے شکار کے  اور 

گھروں کی حفاظت کے لیے کتے  رکھنا جائز ہے۔

جب تک کہ وہ شہر سے باہر ہو اور گھر کی

حفاظت کا کوئی دوسرا ذریعہ نہ ہو۔

مسلمان کو کتے کے ساتھ دوڑنے ،اس کے منہ کو چھونے

اور چومنے سے دوسروں کی مشابہت نہیں کرنی چاہئے

جس سے بہت سی بیماریاں ہوتی ہیں۔

You Make Also Like: The First US City will be Michigan City To Be Led By All Muslim Government

 

Leave a Reply

Your email address will not be published.