محمد صلی اللہ علیہ وسلم کے نبی ہونے کا ثبوت

محمد صلی اللہ علیہ وسلم کے نبی ہونے کا ثبوت

Evidence that Muhammad was a Prophet

محمد صلی اللہ علیہ وسلم کے نبی ہونے کا ثبوت

 

تمام تعریفیں اللہ کے لیے ہیں جو تمام جہانوں کا رب ہے  میں گواہی دیتا ہوں

کہ اللہ کے سوا کوئی عبادت کے لائق نہیں اور محمد صلی اللہ علیہ وسلم اس کے

بندے اور رسول ہیں۔

محمد صلی اللہ علیہ وسلم کی نبوت کو ثابت کرنے والی نشانیاں بے شمار ہیں۔

ان کو شمار کرنے اور ان پر مکمل بحث کرنے کے لیے بہت سی کتابیں لکھی

گئی ہیں  ہم ان علامات میں سے کچھ کا تذکرہ کرنا چاہتے ہیں جیسا کہ مسلم

علماء نے بیان کیا ہے اور جو یہ ثابت کرتی ہیں کہ محمد صلی اللہ علیہ وسلم

ایک حقیقی نبی تھےسب سے پہلے ان کی سیرت اور اعلیٰ اخلاق کے ساتھ ساتھ

وہ اعلیٰ صفات جو انہیں ممتاز کرتی تھیں  وہ نبی بننے سے پہلے ایک سچے اور

دیانت دار شخص کے طور پر جانے جاتے تھے حالانکہ جس کمیونٹی میں وہ رہتے تھے۔

وہ جاہلیت کا معاشرہ تھا  یہ  شاید  اس کی پیشن گوئی کی سب سے اہم نشانی تھی۔

اس نے کبھی لوگوں پر جھوٹ نہیں بولا تھا  تو وہ نبی ہونے کا دعویٰ کر کے

آدھے رب ہونے پر جھوٹ کیوں بولے  اگر وہ حقیقی نبی نہیں تھا۔

 

تمام موجودہ مذاہب پر فتح 

 

دوسرا، اللہ تعالیٰ نے جو اختیارات اور فتوحات اسے عطا کیں اور جس دین کی

اس نے تبلیغ کی  اس کا پھیلاؤ  نیز اس مذہب کی مختصر مدت میں تمام موجودہ

مذاہب پر فتح  اگر وہ جھوٹا ہوتا تو اللہ تعالیٰ اسے ذلیل و برباد کر دیتا جیسا کہ اس

نے اس سے پہلے کے لوگوں کے ساتھ کیا جنہوں نے نبوت کا جھوٹا دعویٰ کیا تھا۔

– تیسرا، اللہ تعالیٰ نے جو معجزات اس کو ثبوت کے طور پر عطا کیے تھے وہ انسانوں کی

طاقت سے باہر تھے اور قدرتی مظاہر کی حد سے باہر تھے۔ اس کے لیے چاند پھٹ گیا۔

اس کی انگلیوں سے پانی پھوٹ پڑا  اس کے ہاتھوں میں خوراک زیادہ ہو گئی  اور

اسی طرح کے واقعات مستند طور پر بیان کیے گئے اور اس طرح رونما ہوئے جس

Evidence that Muhammad was a Prophet سے انکار ممکن نہیں۔

 

معجزات

 

چوتھا، رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کو سب سے بڑے معجزے کی تائید حاصل تھی۔

جو کہ قرآن ہے  درحقیقت قرآن ایک چیلنج تھا اور عربوں کے لیے ایک چیلنج ہے۔

جو اچھے شاعر اور فصیح مقرر کے طور پر جانے جاتے تھے  اللہ تعالیٰ نے انہیں چیلنج

کیا کہ وہ ایک سورہ (باب) لکھیں جو قرآن سے ملتی جلتی ہو  لیکن عرب ایسا کرنے

سے قاصر رہے  درحقیقت  چیلنج اب بھی برقرار ہے  پوری تاریخ میں عربوں میں

سے کوئی بھی   قرآن کے نزول کے بعد سے   کوئی بھی ایسی چیز بنانے کے قابل نہیں

تھا جو اس سے ملتا جلتا ہو  اس میں کوئی شک نہیں کہ قرآن ہمارے پاس آنے تک

محفوظ ہے  لوگوں کے گروپوں نے اسے حفظ کیا جس میں بچے، بالغ، مرد اور خواتین

شامل تھے  چنانچہ نسل در نسل قرآن کو لے کر آئے یہاں تک کہ یہ ہم تک پہنچا جیسا

کہ یہ 14 صدیاں پہلے نازل ہوا تھا  لہٰذا  قرآن مجید تحریف یا ردوبدل سے محفوظ رہتا

ہے  اس میں کچھ شامل نہیں کیا گیا اور نہ ہی اس سے کچھ لیا گیا ہے  قرآن سائنسی

حقائق سے بھرا پڑا ہے جن کی تصدیق صرف سائنسی تحقیقات کے اس دور میں ہوئی تھی۔

اس میں کوئی شک نہیں کہ محمد جو ان پڑھ تھا 14 صدیاں پہلے اس علم کے مالک نہ ہوں گے۔

کیا یہ قرآن کی صداقت کو ثابت نہیں کرتا اور یہ کہ یہ خالق کائنات کا کلام ہے جو اس کے

 تمام رازوں کو جانتا ہے۔

 

جب قیامت کا دن آئے گا

 

پانچویں، غیب کی وہ چیزیں جن کے بارے میں آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے ہمیں بتایا۔

ان میں سے کچھ ان کی زندگی کے دوران ہوئے  دوسرے بعد میں ہوئے  ان میں سے

کچھ انبیاء علیہم السلام کے ساتھ پیش آئے  اللہ ان کا ذکر بلند کرے  جو ان سے پہلے

ہو چکے ہیں اور کچھ ابھی باقی ہیں  اس نے قیامت کی نشانیوں کے بارے میں بھی

آگاہ کیا  جن میں سے کچھ پہلے ہی دیکھے جا چکے ہیں جیسے کہ بڑے پیمانے پر قتل و غارت

اور نسل کشی، زنا اور زنا اور شراب نوشی، مردوں کی تعداد عورتوں سے بڑھ جانا اور

Evidence that Muhammad was a Prophet زلزلوں کی تعداد میں اضافہ  اور مصیبتیں ،… وغیرہ۔

 

نجس (حبشی کے بادشاہ

 

چھٹا، اہل کتاب میں سے بعض کی گواہی کہ وہ سچے نبی تھے  ان میں سے کچھ ان پر ایمان

لائے جیسے عبداللہ بن سلام رضی اللہ عنہ جو یہودی تھے اور نجس (حبشی کے بادشاہ)

جو عیسائی تھے  بعض اہل کتاب نے تصدیق کی کہ وہ اللہ کے نبی ہیں لیکن حیی ابن اخطب

کی طرح ان کی پیروی سے انکار کر دیا مندرجہ بالا چند نشانیاں ہیں جو ان کی نبوت اور ان

کی آیات کی صداقت کو ثابت کرتی ہیں  ہم چاہیں گے کہ سائل اپنے علاقے میں کچھ اسلامی

مراکز کا دورہ کرے  اور امید ہے کہ وہ اس معاملے میں کچھ مفید حوالوں کی طرف رہنمائی

کریں گے۔

You may Also Like:From The Holy Quran And Sunnah

You may Also Like:The Story of the Prophet Musa (AS)

Leave a Reply

Your email address will not be published.