عاشورہ ہمیں یاد دلاتا ہے کہ اسلام ابراہیمی روایت کا ایک لازمی حصہ ہے

عاشورہ ہمیں یاد دلاتا ہے کہ اسلام ابراہیمی روایت کا ایک لازمی حصہ ہے

Ashura Reminds Us That Islam Is An Integral Part Of Abrahamic Tradition

Ashura Reminds Us That Islam Is An Integral Part Of Abrahamic Tradition

 

اسلام ایک اجنبی مشرقی مذہب ہونے سے بہت دور ابراہیمی روایت کا ایک لازمی حصہ ہے

یہودیت عیسائیت اور اسلام کو باندھتا ہے یہ مشترکہ ورثہ دنیا کی نصف سے زیادہ آبادی کو جوڑتا ہے

اور دنیا میں بقائے باہمی کو بڑھانے کی ہماری کوششوں میں ایک اہم ذریعہ ہے۔

اس سے یہ اور بھی زیادہ المناک ہو جاتا ہے کہ تینوں مذاہب کو متحد کرنے والے

بہت سے واقعات کو تفرقہ انگیز  یا یہاں تک کہ سراسر نسل پرستانہ  بیان بازی سے دور

دائیں بازو کی طرف سے دھکیل دیا جاتا ہے۔ ان واقعات میں سب سے پہلا واقعہ عاشورہ ہے

 اس تقریب کو مسلمانوں اور دیگر مذاہب کے پیروکاروں کی طرف سے یاد کیا جاتا ہے

یہاں تک کہ کچھ ہندو بھی شامل ہیں جو حسینی برہمن کے نام سے جانے جاتے ہیں۔

عاشورا سفاک اموی خاندان کے ابتدائی حکمران یزید کے ہاتھوں پیغمبر اسلام کے نواسے

امام حسین کے قتل کی سالانہ یادگار ہے۔ یہ ایک واقعہ تھا جو 1300 سال پہلے پیش آیا تھا

لیکن بہت سے مسلمان اسے اسلام کے ابراہیمی ورثے کی انتہا اور عالمی تاریخ کی

ایک اہم تاریخ کے طور پر دیکھتے ہیں۔عاشورہ مسلم روایت میں ایک تاریخ ہے

جو بزرگوں کی زندگیوں میں اہم رہی ہے جسے اکثر یہودی عیسائی روایت کہا جاتا ہے۔

آدم سے شروع ہو کر، نوح، ابراہیم، موسیٰ اور عیسیٰ تک، ان تمام انبیاء نے

بہت سے مسلمانوں کے نقطہ نظر سے عاشورہ کے دن زندگی کے بہت بڑے واقعات پیش کیے ہیں۔

یسوع کی روح کا آسمان پر اٹھانا (عیسائی عقیدے میں مصلوب کرنے کے مترادف ہے) اور

موسیٰ کے ذریعہ بحیرہ احمر کا پھٹ جانا (یہودیوں نے عید فسح کے موقع پر منایا) بہت سے

مسلمانوں کے خیال میں عاشورہ کے دسویں دن واقع ہوئے تھے۔

اسلامی کیلنڈر میں محرم کا مہینہ۔

اور امام حسین کے ذبح کے موضوعات اتنے عالمگیر ہیں کہ وہ غیر مسلموں کو اسلام سے

اس طرح منسلک کرنے میں مدد کر سکتے ہیں جو کہ موجودہ ماحول میں بعض اوقات مشکل ہو سکتا ہے۔

یہ ضروری ہے کہ چونکہ دنیا بھر کے مسلمان اس تاریخ کو یاد کرتے ہیں وسیع تر معاشرہ

اسے ایک بین المذاہب تقریب کے طور پر قبول کرتا ہے۔

یہ ایک المیہ ہے جو نہ صرف مسلمانوں بلکہ پوری انسانیت کا ہے۔

سماجی انصاف کے لیے امام حسین کا موقف ان کے عقیدے سے کارفرما تھا۔

وہ جانتا تھا کہ وہ اور اس کے 70 سے زائد پیروکاروں (جن میں سے اکثر خواتین اور

بچے اس کے خاندان سے تھے) کے اموی فوج کے حملے سے بچنے کا کوئی امکان نہیں تھا۔

لیکن نتائج کی پرواہ کیے بغیر اس کے لیے ایک موقف اختیار کرنا ضروری تھا۔

دنیا کو ایک بہتر جگہ بنانے کے لیے اصول سے ہٹ کر کام کرنا ٹکن اولم کے

یہودی عقیدے کی کلید ہے ٹوٹی ہوئی دنیا کی مرمت کرنا۔

اسی طرح پیغمبر کے خاندان کی آخری قربانی ایک ایسی تصویر ہے جس سے بہت سے عیسائی

آسانی سے پہچان سکتے ہیں۔ مصائب اور توبہ عیسائی عقیدے کا کلیدی حصہ ہیں ایک طاقتور فوجی

طاقت کے ہاتھوں امام حسین اور ان کے خاندان کو سرد خون کے ساتھ قتل کرنے کی خونی حقیقت

رومیوں اور مسیحی روایت میں عیسیٰ کو ان کے مصلوب کیے جانے سے قریب تر ہے۔

یہ ضروری ہے کہ چونکہ دنیا بھر کے مسلمان اس تاریخ کو یاد کرتے ہیں

وسیع تر معاشرہ اسے ایک بین المذاہب تقریب کے طور پر قبول کرتا ہے۔

یہ ایک المیہ ہے جو نہ صرف مسلمانوں بلکہ پوری انسانیت کا ہے۔

مسلمان امام حسین اور پیغمبر محمد کے خاندان سے محبت کرتے ہیں نہ صرف اس لیے کہ

وہ محمد کی اولاد ہیں بلکہ اس لیے کہ وہ ابراہیم کی اولاد ہیں۔ہم اکثر “یہودی عیسائی

روایت کے بارے میں سنتے ہیں لیکن حقیقت میں یہ یہودی مسیحی مسلم  یعنی ابراہیمی روایت ہے۔

یہودی عیسائی مغربی ثقافت کے لیے ایک ولولہ انگیزی بن گیا ہے اس ورثے سے

مسلمانوں کا اخراج اس قسم کی یورو سینٹرک بالادستی کا ایک لطیف اشارہ ہے

جس نے 20ویں صدی میں دنیا کو بہت زیادہ نقصان پہنچایا ہے  اور اس سے بچنا ضروری ہے ۔

عاشورہ کے دن پیغمبر اسلام کے خاندان کے قتل نے نہ صرف اسلام بلکہ عالمی تاریخ کا رخ بدل دیا۔

الٰہی اور دنیاوی عدل و انصاف حق و باطل کے درمیان معرکہ آرائی ایک ایسی معرکہ آرائی ہے

جو نہ صرف اسلامی دنیا میں بلکہ تمام بڑی مذہبی روایات اور ثقافتوں میں آج تک جاری ہے۔

یہ ایک ایسی جدوجہد ہے جس پر مسلمان، عیسائیت، یہودیت اور دیگر مذہبی روایات سے تعلق رکھنے والے

اپنے ساتھی مومنین کے ساتھ مل کر شروع کر رہے ہیں۔ اس سے یہ سب زیادہ بدقسمتی ہے کہ

ایوینجلیکل عیسائیوں اور قدامت پسند یہودی گروپوں کے کچھ کیمپوں میں اسلامو فوبیا جڑ پکڑ رہا ہے۔

ہم سب ایک ہی دیوار کے خلاف کھڑے ہیں، اور اب وقت آگیا ہے کہ

ہم سماجی انصاف اور اصلاح کے مشترکہ مقاصد کے لیے مل کر کام کریں۔

You May Also Like: Ashura Day Hundreds Thousands Of Pilgrims Thronged For

Leave a Reply

Your email address will not be published.